سیاسی باتیںنمایاں

اقرا یونیورسٹی ملک کی صف اول کی جامعات میں سے ایک ہے ،شہریارآفریدی

*
وفاقی وزیر برائے انسداد منشیات شہریار خان آفریدی نے کہا کہ اقرا یونیورسٹی آ کر بے حد خوشی محسوس ہورہی ہے، یہاں کے طلبہ کا جوش وخروش لائق تحسین ہے۔نوجوان ہی ہمارا ا سرمایہ ہیں اس ملک کو آگے نوجوانوں نے ہی سنبھالنا ہے ہمیں نشے سے جان چھڑانی ہے ہم نے سوچنا ہے کہ نشے کا سہارا کیوں لیا جاتا ہے آج ایک فنگر ٹپ پر پوری دنیا اللہ نے آپ کے طابع کردی ہے میں حنید لاکھانی ، اراکین اسمبلی، میڈیا اور نوجوانوں کا مشکور ہوں منشیات پاکستانی قوم کے آگے ایک بڑا مسئلہ ہے یوتھ اور جنریشن کو نظرانداز نہیں کیا جاسکتا 2013میں ہمارے معاشرے میں ڈرگس کا رجحان بڑھ رہا تھا تو اس وقت میں نے سوچا اس کے خلاف آواز اٹھانی ہے نوجوان اس ملک کا سرمایہ ہیں اور نوجوان اس وقت منشیات کے خلاف جنگ لڑ رہے ہیں سونیا گاندھی کے بیان نے بھارت کی سوچ کو واضح کیا ہمارا نوجوان کسی اور سوچ کے مطابق چل رہا ہے ۔ قومیں قربانیاں دینے سے بنتی ہیں منشیات کے خلاف بیداری کے لیے سوشل میڈیا کا مثبت استعمال کیا جاسکتا ہے مسلمانوں کو دنیا میں اپنی پہچان خود بنانی ہوگی منشیات کے استعمال سے قومیں تباہ ہوجاتی ہیں اینٹی نارکوٹکس فورس بہت اچھا کام کررہی ہے اے این ایف کی ذمہ داری ہے منشیات کو روکناہم نے زندگی ایپ کے ذریعے والدین اور بچوں کے لیے منشیات کے متعلق تمام آگاہی فراہم کردی ہے آج دنیا کے معاشی اور سوشل سسٹم ہم سے کئی آگے ہیں ہمیں بھی اپنے نوجوانوں کو اس کے لیے آگے لانا ہوگانوجوانوں کو پاکستان اور پاکستان کو نوجوانوں کی ضرورت ہے میں چاہتا ہوں کہ نوجوان میرا پیغام آگے پہنچانا ہے حنید لاکھانی کا مشکور ہوں کہ انہوں نے نوجوانوں میں منشیا ت کی روک تھام میں ہمارا ساتھ دیا۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے اقرا یونیورسٹی کے زیر اہتمام انسداد منشیات پر سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پربانی چانسلر اقرا یونیورسٹی حنید لاکھانی ،وائس چانسلر وفاقی جامعہ اردو پروفیسر ڈاکٹر عارف زبیر،اراکین اسمبلی جمال صدیقی، جئے پرکاش لوہانا، شہزاد قریشی، شاہنواز جدون،رابستان خان ، ڈاکٹر سنجے گنگوانی ،ادیبہ حسن ،اساتذہ کرام اور طلبہ کی بڑی تعداد موجود تھی۔
انھوں نے اساتذہ کے وفد سے بھی ملاقات کی اور اقرا یونیورسٹی کے تعلیمی اور تحقیقی معیار کو بے حد سراہا۔ بانی چانسلر اور سربراہ بیت المال سندھ حنید لاکھانی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آج کی تقریب خاص طور پر منشیات کے خلاف بیداری کرنے کے حوالے سے بچوں کے لیے منقد کی گئی ہے شہریار آفریدی کو اقراءیونیورسٹی آنے پر خوش آمدید کہتے ہیں اس معاشی حالت میں پرائیویٹ سیکٹرز کی فیسز دینا آسان نہیں آپ پاکستان کا بہتر مستقبل ہیں آپ نے آگے جاکر اس ملک کی خدمت کرنی ہے نشے کی لعنت سے چھٹکارے کے لیے ہمیں اپنے آپ کو اندر سے مضبوط کرنا ہوگا نشے کی لعنت نہ صرف اس بچے بلکہ پورے خاندان اور اس ملک کے مستقبل کو تباہ کردیتی ہے ہر گھر میں کوئی نہ کوئی ایک شخص اس لت میں مبتلا ہے وفاقی حکومت اور اینٹی نارکوٹکس منشیات کی ورک تھام کے حوالے سے بہترین کام کررہا ہے۔دریں اثناءانہوںنے وائس آف سندھ ،ر حنید لاکھانی کی زیر سرپرستی چلنے والے اداروں کے بھی دورے کیئے اور حنید لاکھانی کی سماجی خدمات دیگر اداروں کے دورے کے دوراں میڈیا اور سوشل میڈیا ٹیم سے ملاقات بھی کی۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close