روشن پاکستان

ایک شام بشیر سدوزئی کے نام

میٹروپولیٹن کمشنر ڈاکٹر سید سیف الرحمن نے کہاہے کہ بلدیہ عظمیٰ کراچی کے افسران کو شہر کی خدمت اور ترقی کے لئے سخت محنت کرنے کی ضرورت ہے اچھے اور نیک نام افسران ادارے کی مضبوطی اور ترقی کے لئے بہت ضروری ہیں، جس نے محنت اور صلاحیت سے میرٹ پر ترقی کرنی ہے وہ بشیر سدوزئی جیسے لوگوں کو اپنا رول ماڈل بنائیں۔ بلدیہ عظمیٰ کراچی بشیر سدوزئی کو اپنا افسر کہتے ہوئے فخر محسوس کرتی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ شام کے ایم سی آفیسرز کلب میں سٹی اونرز ویلفیئر ایسوسی ایشن کے زیراہتمام میں ریٹائر ہونے والے بلدیہ عظمی کراچی کے آفیسر بشیر سدوزئی کے اعزاز میں منعقدہ استقبالیہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تقریب سے آرٹس کونسل آف پاکستان کراچی کے سیکرٹری کے صدر پروفیسر اعجاز فاروقی، ممبر گورننگ باڈی آرٹس کونسل اسجد بخاری، معروف دانشور رضوان صدیقی، کے ایم سی کے افسران، محمد ریحان خان، مظہر خان،علی حسن ساجد، طارق رحمانی،نذیر متین،زینت بلوچ، ہما خان،سینئر صحافی شہزاد چغتائی، شاہد مصطفیٰ،اسلم خان اور دیگر نے بھی خطاب کیا جبکہ اس موقع پر بشیر سدوزئی کو یادگاری شیلڈ اور بڑی تعداد میں گلدستے پیش کیئے گئے اور ان کی خدمات کو سراہتے ہوئے زبردست الفاظ میں خراج تحسین پیش کیا۔ میٹروپولیٹن کمشنر نے کہا کہ علم میں اضافہ اور لوگوں سے اچھے رابطے انسان کو آگے لے جاتے ہیں اس کی بہترین مثال بشیر سدوزئی ہیں جنھوں نے شخص سے شخصیت کا سفر احسن طریقے سے طے کیا آزاد کشمیر کے پہاڑوں سے ہجرت کرکے کراچی جیسے بڑے شہر میں نام کمانا آسان کام نہیں اور نہ ہی کوئی عام فرد یہ اعزاز حاصل کر سکتا ہے جہاں پہلے ہی مشکلات ہیں اس سے اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ دنیا کو کسی کا چہرہ یا ذات نہیں کام پسند ہے۔ اگر وہ خود اچھا انسان ہو تو دنیا اس کے لئے اچھی ہے۔ بلدیہ عظمی کراچی بشیر سدوزئی کو اپنا افسر کہنے میں فخر محسوس کرتی ہے۔ کتابیں لکھنا آسان کام نہیں انہوں نے سرکاری ذمہ داریوں کے ساتھ کتابیں بھی لکھیں یہ کسی عام آدمی کا کام نہیں اس کے لئے بہت زیادہ باصلاحیت ہونا ضروری ہے۔ پروفیسر اعجاز فاروقی نے کہا کہ بشیر سدوزئی آرٹس کونسل کی ہر دلعزیز شخصیت ہیں ان کی گورننگ باڈی میں شمولیت اور پریس اینڈ پبلیکیشن کے چیئرمین کا عہدہ سنبھالنے کے بعد میڈیا ڈیپارٹمنٹ انتہائی فعال ہوگیا ہے، معروف دانشور رضوان صدیقی نے کہا کہ جو افسر عزت اور فخر سے ریٹائر ہونا چاہتا ہے اسے بشیر سدوزئی بننا پڑیگا، ریحان خان نے کہا کہ بشیرسدوزئی باصلاحیت محنتی اور نیک نام افسر ہیں،ایسوسی ایشن کے چیئرمین مظہر خان نے کہا کہ بشیر سدوزئی اچھے افسر ہونے کے ساتھ ساتھ بہترین انسان بھی ہیں، ڈائریکٹر میڈیا مینجمنٹ علی حسن ساجد نے کہا کہ انھوں نے بنیادی سطح سے اپنے سفر کا آغاز کیا اوربہترین کارکردگی سے منفرد مقام پیدا کیا، طارق رحمانی نے اپنی چالیس سالہ رفاقت پر روشنی ڈالتے ہوئے ان کی علمی، ادبی اور سماجی کاموں پر انھیں خراج تحسین پیش کیا، زینت بلوچ اور ہما خان نے کہا کہ ان کے ساتھ کام کرتے ہوئے محسوس ہوتا ہے کہ اپنے گھر میں کام کر رہے ہیں، ان کے ساتھ کام کرتے ہوئے گھر جیسا ماحول ملا، سینئر صحافی شہزاد چغتائی اور شاہد مصطفی نے کہا کہ یہ بہترین میڈیا منیجر ہیں بلدیہ عظمیٰ کراچی کو ان کے تجربے اور صلاحیتوں سے مزید فائدہ اٹھانا چاہیے، بشیر سدوزئی نے تقریب کے انعقاد پر سٹی اونرز ویلفیئر ایسوسی ایشن کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کے ایم سی کے افسران اور ملازمین کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ ایک ایک فرد سے دل کا رشتہ ہے جو کبھی ٹوٹ نہیں سکتا۔ کراچی اور کراچی والوں نے مجھے بہت عزت دی جس کا میں احسان مند رہوں گا۔ انہوں نے کہا کہ میں کے ایم سی کو اس کی تاریخ کی شکل میں ایک تحفہ دے کر جا رہا ہوں جو میرا اور بلدیہ عظمیٰ کراچی کا تعلق بحال رکھے گااور دانشوروں کے گھروں، دانشگاہوں اور لائبریریوں میں بلدیہ کے ماضی کے کارنامے زندہ رہیں گے اس موقع پرمیٹرو پولیٹن کمشنر نے اجرک کا تحفہ پیش کیا اور کے ایم سی آفیسرز ویلفیئر ایسوسی ایشن کے صدر جمیل فاروقی، جنرل سیکرٹری بلال منظر سمیت دیگرعہدیداروں نے پھول و تحائف پیش کرتے ہوئے ان کی خدمات پر زبردست خراج تحسین پیش کیا۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close