میرا کراچینمایاں

محکمہ تعلیم سندھ جعلی بھرتی وترقی پر گریڈ 18 کے افسر کو عہدے سے ہٹادیا

ڈائریکٹوریٹ آف پرائیوٹ انسٹی ٹیویشن کے ڈپٹی ڈائریکٹر عبدالزاق قاضی کو عہدہ سے ہٹا دیا گیا ہے میڈیا رپورٹس کے مطابق جعلی تقریری اور ترقی پر عبدالرزاق قاضی کے خلاف اینٹی کرپشن کی تحقیقات بھی جاری ہے اینٹی کرپشن سندھ نے سیکرٹری تعلیم اور ڈائریکٹر جنرل پرائیوٹ انسٹی ٹیوشن سے ریکارڈ بھی طلب کرلیااینٹی کرپشن ذرائع کے مطابق عبدالرزاق قاضی کی جونیئر سکول ٹیچر پر بھرتی اور سبجیکٹ اسپیشلسٹ تک ترقی متنازعہ ہے۔ عبدالرزاق قاضی کی جعلی تقریری اور پروموشن پر سابق سیکریٹری تعلیم خاموش رہے ۔عبدالرزاق قاضی جعلی تقررنامے پر جوئنیر اسکول ٹیچر بھرتی ہوئے تھےجعلسازی کرکےجے ایس ٹی ٹیچر سے گریڈ 18کے سبجیکٹ اسپیشلسٹ تک پہنچ گے عبدالرزاق قاضی ڈائریکٹوریٹ آف پرائیویٹ انسٹی ٹیوشنزمیں ڈپٹی ڈائریکٹرتعینات تھے محکمہ تعلیم کے پاس عبدالرزاق قاضی کی پرسنل فائل ہے ناں دیگر ریکارڈ ہے 1986 سے اب تک عبدالرزاق قاضی کہاں کہاں تعینات رہے کسی کو معلوم نہیں نیب کی سفارش پر قاضی عبدالرزاق کے خلاف دوبار انکوائری ہوچکی ہے

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button
Close
Close