کالمز/بلاگز

پولیس کے محکمے کے بنیادی مسائل اضافہ کیوں؟

تحریر: وحید جیلانی

محکمہ پولیس کی بنیادی مسائل بڑھ گئےعوامی رابطہ مہم ختم ہوکر رہ گئی جبکہ ملازمین کی ضروریات بھی بالکل میسر نہیں اور رفتہ رفتہ ایک طاقتوار ادارہ کمزوری کے طرف رواں دواں ہے۔۔۔ایسا کیوں۔۔؟
محکمہ پولیس جس میں انسانیت کے خدمت کے مواقع سب سے زیادہ ہیں۔اور ہر پولیس اہلکار کومواقع ضرور ملتے ہوں گے۔
محکمہ پولیس براہ راستہ عوامی خدمت پر مامور ہے مگر عوام سے کیوں دور ہے یا عوام پولیس سے کیوں دور ہے۔۔۔؟
محکمہ پولیس سندھ کے ہر آئی جی نے عوامی رابطہ مہم کے لیے اقدام بلا شبہ کیئے مگر سب کے سب ناکام اور تازہ ترین یہ کہ جو کمیونٹی پولیسنگ تھی وہ بھی نہ جانے کس پالیسی کی نظر ہو کر رہ گئی۔
محکمہ پولیس کے سپاہی ایسے بھی ہیں جو کئی سالوں سے کورس پر نہ جا سکےاور فائر کرنا بھی بھول گئے اوردور دراز کے علاقوں میں تعیناتی اور 12گھنٹہ کی مسلسل ڈیوٹی نے پولیس ملازمین کو مختلف امراض میں مبتلا کردیا ہےکئی تو نفسیاتی ہو چکے ہیں۔۔۔۔
جناب نفسیاتی تو ہوں گے ایک سپاہی جو بیمارباپ بوڑھی ماں کا نہ علاج کراسکے نہ ہی دیکھ بھال اور نہ ہی خدمت تو پھر نفسیاتی تو ہوگا چھٹی نہ ملتی ہوبنیادی ضروریات نہ ملتی ہوں اور ڈیوٹی کے دوران اعلی افسران کی جھاڑ ایس ایچ او ہیڈ محرر کی بدزبانی برداشت کرنا ہو تو نفسیاتی توہوگا محکمہ پولیس میں گروپ بازی بھی ہے جو سی ایس ایس اور رینکر افسران کی سرد جنگ ہے جو آج تک ختم نہ ہو سکی اور شاید ختم نہ ہوسکے۔۔۔
تفتیش کے بنیادی اموار آگہی کے لیے ورکشاب جو ضروری ہیں پولیس اور عوامی رابطہ بہت ضروری ہے اس کے لیے ورکشاب منعقد ہوں جن میں فوٹو سیشن کے بجائے سنیئر افسران شرکت کریں اور جو نئیرز کو تفتیشی اسرار ورموز سے آگاہ کریں۔۔ایک بات زرا کڑوی ہے شایدبرداشت نہ ہووہ یہ کہ جو بھی سربراہ آتا ہے وہ محکمہ کے مسائل کے بجائے غیر ضروری تقریبات شخصیات میں مصروف نظر آتا ہو تو محکمہ مستحکم کیسے ہوگا اور ۔۔اور اگر ایک ہفتہ مسلسل سی پی او اور کے پی او کے باہر محکمہ پولیس ملازمین عوام کے ساتھ ساتھ شہید مرحوم اور رئٹائرڈ ملازمین کے اہل خانہ کی دربدری دیکھ لی جائے تو۔۔۔محکمہ پر اور یہ کسی بات ہے کہ ہزاروں نوکریاں دی جارہی ہے مگر شہید مرحوم اور رئٹائرڈ ملازمین کے بچے مرحوم ہوں تو وہ استحکام کہاں سے آئے گا۔
بس ایک گزارش ہے محکمہ کے بنیادی ڈھانچہ کو مظبوط کیا جائے ملازمین کے مسائل حل کئے جائیں کمیونٹی پولیسنک کو بڑھ یا جائے تاکہ ادارہ مستحکم ہو کیونکہ ادارہ مستحکم ہوگا توسپاہی اورآئی جی دونوں مستحکم ہونگے۔۔۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button
Close
Close