ادھر اُدھر کیقومی

مصطفیٰ کمال کی وفاقی اور صوبائی حکومتوں پر تنقید

پاک سرزمین پارٹی کے چیئرمین مصطفیٰ کمال کا کہنا ہے کہ وفاقی،صوبائی اور لوکل گورنمنٹ نااہل ہیں، لوگ لائنیں لگا کر آٹا خرید رہے ہیں۔

مصطفیٰ کمال نے کراچی میں پریس کانفرنس کے دوران وفاقی اور صوبائی حکومتوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ کن لوگوں کے ہاتھوں میں پاکستان ہے، سندھ حکومت مکمل ناکام ہوچکی ہے، ، سندھ کا برا حال ہے کوئی کام بغیر پیسے کے نہیں ہوتا، ایک وفاقی وزیر کراچی صاف کرنے نکلے تھے، صرف ٹوئٹرپرصفائی کی اور چلتے بنے ۔

انہوں نے کہا کہ اسد عمر نے کہا کہ وہ سندھ کے بلدیات کے قانون کو عدالت میں چیلنج کریں گے۔

مصطفیٰ کمال کا کہنا تھا کہ جب کے پی اور پنجاب نے بلدیاتی نظام بنایا تو کیا سندھ سے مشاورت کی؟  وفاقی کو آئی جی سندھ کی تبدیلی میں رکاوٹ نہیں ڈالنا چاہئے، اگرسندھ حکومت اس آئی جی کی تبدیلی چاہتی ہےتوتبدیل ہونا چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ نفرت کی سیاست ختم، سندھ میں لوگ پی ایس پی کے جھنڈے تلے جمع ہو رہے ہیں، لوگوں کے ذہن میں سوال ہےکہ لاڑکانہ جا کر کیسے کامیابی حاصل کرسکتا ہوں۔

مصطفیٰ کمال نے کہا کہ کے فور کے پرانے ڈیزائن پر کام نہ کرکے کئی برس ضائع کئے گئے ہیں، معلوم ہوا ہے کے فور پرانے ڈیزائن پر بنایا جائے گا، ہم تو پہلے ہی کہتے تھے پرانے ڈیزائن میں کوئی مسئلہ نہیں ہے۔

مصطفیٰ کمال نے مزید کہا کہ وزیراعلیٰ اور بلاول نے پانی کی چار موٹروں کا افتتاح کیا ہے، کس جمہوریت میں وزیر اعلیٰ پانی اور سیوریج کے منصوبوں کا افتتاح کرتا ہے؟ وزیراعلیٰ اوربلاول نےشکوہ کیا ہے کہ وفاق تعاون نہیں کر رہا، تمام مسائل کی وجہ وفاق کو قرار دینا بھی سراسر غلط ہے، کراچی کی شہری حکومت کرپشن میں لگی ہوئی ہے۔

Tags
Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close