سیاسی باتیں

مقامی تاجروں کے ساتھ متصبانہ سلوک قابل قبول نہیں،آفاق احمد

مہاجر قومی موومنٹ(پاکستان) کے چیئرمین آفاق احمد نے اپنی رہاشگاہ پر ہونے والی پریس کانفرنس میں حکومتی عصبیت اور پولیس کی جانب سے تاجروں، محنت کش طبقے اور صحافیوں پر کئے جانے والے تشدد پر شدید غم و غصے کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ حکومت اور پولیس نے اپنی رویش تبدیل نہ کی تو سخت لائحہ عمل دیا جائیگا۔انہوں نے کہا کہ گزشتہ کئی دنوں سے مسلسل تاجروں سے رابطے میں ہو جبکہ کراچی اور حیدر آباد کی درجنوں یونینوں کے وفود سے ملاقات کرچکا ہوں اور یہ سلسلہ ابھی بھی جاری ہے چار چھ دن میں حتمی فیصلہ کرکے عملی اقدام کرکے دکھائیں گے۔انہوں نے کہا کہ دکانیں بند اور کھلوانے کا اختیار پولیس کو دینے کا مقصد بھتہ گیری کی کھلی چھوٹ دینے کے مترادف ہے، کرونا کے حوالے سے بنائی جانے والی پالیسیوں میں تاجر برادری سے مشاورت،قوائد و ضابط طے کر کے عمل درآمد کیلئے کم از کم 48گھنٹے کا وقت دیا جانا چاہیے نا کہ حکم شاہی جاری کرکے پولیس کو لشکر کشی کے لئے بھیج دیا جائے یہ آزاد ریاست ہے مقبوضہ علاقہ نہ بنایا جائے۔انہوں نے کہا کہ لاک ڈاؤن میں مہاجر آبادیوں کے بازار بند کرانا اور غیر مہاجر آبادیوں میں آزادانہ کاروبار کی چھوٹ کا مقصد مقامی تاجروں کو کمزور کرنا جبکہ غیر مہاجر آبادیوں کو فائدہ پہنچانا ہے انہوں نے کہا کہ لاک ڈاؤن میں شنواری کی کڑھائی تو مل سکتی ہے لیکن دہلی کی نہاری نہیں یہ کونسا انصاف ہے۔ انہوں نے لاک ڈاؤن کے دوران پولیس کی سفاکیت دکھانے پر صحافیوں پر کئے جانے والے تشدد کی شدید مذمت کرتے ہوئے اپنی مکمل حمایت اعلان کرتے ہوئے کہا کہ میں صحافی برادری کے ساتھ ہوں اور صحافیوں بھائیوں سے بھی اپیل کی سچ کو اپنا فرض سمجھ کر ادا کرتے رہے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button
Close
Close