ادھر اُدھر کینمایاں

امتحانی مراکز میں نقل کی روک تھام کے لیے تمام مراکز پر سخت انتظامات کیے گئے ہیں، اسماعیل راہو

صوبائی وزیر برائے جامعات اینڈ بورڈز اسماعیل راہو نے کہا ہے کہ کراچی سمیت سندھ بھر میں 800 سے زائد امتحانی مراکز میں طلبہ سے امتحانات لیے جا رہے ہیں, نقل روکنے کے لیے تمام مراکز پر سخت انتظامات کیے گئے ہیں. اسماعیل راہو نے مزید کہا کے حیدرآباد,میرپورخاص اور سکھر میں ویجیلنس ٹیموں نے 79 طلبہ کو نقل کرتے ہوئے پکڑا اور ان طلبہ کو پرچہ دینے سے روک دیا, جب کے اپنی ڈیوٹی سے غفلت برتنے پر سکھر اور میرپورخاص میں 3 انویجیلیٹرز کو معطل کردیا گیا, طلبہ سے گائیڈز اور موبائل فون بھی برآمد ہوئے. انہوں نے کہا کہ سکھر ڈویزن میں 46, حیدرآباد میں 26 اور میرپورخاص میں 6 طلبہ کو نقل کرتے ہوئے پکڑا گیا. صوبائی وزیر برائے جامعات اور بورڈ نے کہا کہ کراچی میں صبح اور شام کی شفٹوں میں 204 ویجیلنس ٹیمیں نقل روکنے کے لیے امتحانی مراکزکادورہ کررہی ہیں, امتحانات کے دوران کورونا ایس او پیز پر سختی سے عمل کروایا جارہا ہے, کراچی سمیت سندھ بھر کے تمام امتحانی مراکز میں طلبہ کو ماسک کے بغیر داخل ہونے نہیں دیا جا رہا ہے, امتحانی مراکز میں طلبہ اور انویجیلیٹرکے موبائل فونز لانے پر پابندی ہے, امتحانات میں نقل کرنے اور کروانے والوں کے خلاف سخت قانونی کارروائی کی جا رہی ہے.اسماعیل راہو نے کہا کے صوبے کے تمام چیئرمین بورڈز کو امتحانی مراکز کی سخت نگرانی کرنے کی ہدایت کی گئی ہے,امتحانی مراکز کےآس پاس فوٹو اسٹیٹ مشینوں کی دکانیں بھی بند رہیں گی. انہوں نے کہا کہ انتظامیہ اور پولیس امتحانی مراکز کے اندر اور باہر کسی غیر شخص کو کھڑا نہیں ہونے دے رہی.

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button
Close
Close