میرا کراچینمایاں

کراچی میں رہائشی عمارت گرنے کے نتیجے میں جاں بحق افراد کی تعداد 16 ہوگئی

رضویہ سوسائٹی میں 5 منزلہ رہائشی عمارت گرگئی جس کے نتیجے میں متعدد افراد ملبے تلے دب گئے۔ ریسکیو ٹیمیں موقع پر پہنچیں تاہم تنگ گلیوں کے باعث امدادی کاموں میں انہیں مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

دوسری جانب رضویہ تھانے میں سرکار کی مدعیت میں عمارت گرنے سے ہلاکتوں کا مقدمہ درج کرلیا گیا ہے، مقدمے میں غفلت، لاپروائی اور لوگوں کے جان و مال کو نقصان پہچانے کی دفعات شامل کی گئی ہیں۔

حادثے میں 7 خواتین اور 3 بچوں سمیت 16 افراد جاں بحق جب کہ 25 زخمی ہیں جنہیں طبی امداد کے لیے اسپتال منتقل کردیا گیا ہے جہاں بعض زخمیوں کی حالت نازک بتائی جاتی ہے، جاں بحق ہونے والوں کی شناخت یحیی ولد خرم، حیدر ولد خرم ، خواتین میں مریم، حرا ولد عبدالرشید، ایک 40 سالہ خاتون، غلام مصطفی ولد عطا محمد سے ہوئی ہے۔

گرنے والی عمارت سے متصل ایک عمارت ٹیڑھی ہوگئی جس کے گرنے کا خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے،تیسری عمارت کا بھی بیشتر حصہ گرگیا جب کہ  چوتھی عمارت کو مخدوش قرار دیدیا گیا۔

اہل محلہ کے مطابق عمارت جمال فاطمہ نامی خاتون کی ملکیت ہے جنہوں نے 74 گز کے رقبے پر خستہ حال پرانے ستونوں پر یہ 5 منزلہ عمارت تعمیر کرائی تھی جس کی چھٹی منزل پر کچھ ماہ پیشتر ہی پینٹ ہاؤس بھی بنایا گیا۔

وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے کمشنر کراچی کو امدادی کارروائی  کی ہدایت کردی جب کہ پولیس کی نفری بھی موقع پر موجود ہے۔

Tags
Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button
Close
Close